جانوروں کا پسندیدہ کھیل

پہیے پر دوڑ کو عموماً لیبارٹریوں میں سرگرمیوں کے محرک کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے لیکن اکثر اس پرقید و بند ، اعصابی خلل اور دقیانوسیت کا نمونہ ہونے کا اعتراض بھی عائد کیا جاتا رہا ہے لیکن اس غالب گمان کے برعکس چوہے اور دیگر بہت سے جانور پہیے پر دوڑنے کے کافی شوقین ہوتے ہیں ایک تازہ ریسرچ کے دوران دو وِیل جنگلی چوہوں کے مسکن میں الگ تھلگ تین سال کے لیے رکھ دیے گئے اور ان کی حرکت اور ان پر آنے والے جانوروں کا تعین کرنے کے لیے ان پر کیمرے اور دیگر سائنسی آلات نصب کر دیئے گئے تین سالوں میں اکٹھے ہونے والے اعدادو شمار کی روشنی میں یہ سامنے آیا کہ چوہے ،چھچھوندر اورچند دوسرے جانور اپنی مرضی اورخوشی سے پہیے پر بار بار آ کر دوڑتے رہے۔ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ جانور بار بار پہیے پر آ کر کیوں دوڑتے رہے ایک ممکنہ توجیح یہ بھی ہو سکتی ہے کہ وہیل رننگ حیوانی جبلت اور تحریک کی تسکین کرتی ہے اور خلیاتی سطح پر ہونے والی نشونما میں ممدو معاون ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں